1. “Ai-nay jawan e mardan haq

goi-o-be-baki

Allah ke sheron ko ati nahi rubahi”

آئینِ جوانِ مرداں حق گوئی و بیباکی

اللٰہ کے شیروں کو اٰتی نہی رُباہی

 

 

 

2. “Ankh jo kuch dekhti hai

lab pe askta nahi

Mahv-e-hairat hun k

duniya kia se kia ho jaye gi”

آنکھ جو کُچھ دیکھتی لب پے آسکتا نہیں

محو حیرت ہوں کہ دُنیا کیا سے کیا ہو

جائے گی

 

 

3. “Acha hai dil k sath rhay

pasban-e-aqal

lekin kabhi kabhi ise tanha

bhi chorday”

اچھا ہے دل کے ساتھ رہے پاسبانِ عقل

لیکن کبھی کبھی اِسے تنہا بھی

چھوڑدے

 

 

4. “Agar hangama-haye-shoq se

hai la mkan khali

khata kis ki hai ya rab

la mkan tera hai ya mera”

اگر ہنگامہ ہائے شوق سے لامکاں خالی

خطا کِس کی ہے یا رَب لامکاں تیرا ہے

یا میرا

 

 

5. “Ae taer-e-lahuti us rizq

se mout achi

jis rizq se ati ho parvaz

main kotahi”

اے طائرلاہوتی اُس رزق سے موتاچھی

جس رزق سے اتی ہو پرواز میں کوتاہی

 

 

 

6. “Amal se zindagi banti hai

jannat bhi jahanum bhi

ye khaki apni fitrat main

na nuuri hai na naari hai”

عمل سے زندگی بنتی ہے،  جنّت بھی جہنم بھی

یہ خاکی اپنی فطرت میں،  نا نوری ہے نا ناری ہے

 

 

 

7. “Andaz-e-bayan garche magar

shokh nahi hai

shayed k tere dil main

uter jaye meri baat”

اندازِ بیاں گرچہ مگر شوخ نہی ہے

شائد کہ تیرے دِل میں اُتر جائے

میری بات

 

 

8. “Anokhi vaza hai saare

zamanay se nirale hain

ye aashiq kon si basti k

ya rab rehny wale hain”

انوکھی وضع ہہ زمانے سے نرالے ہیں

یہ عاشق کون سی بستی کے یا

رب رہنے والے ہیں

 

 

9. “Apne man men duub kr pa ja

suragh-e-zindagi

tu agr mera nahi banta na ban

apna to ban”

اپنے مَن میں ڈوب کر پا جا سُراغِ زندگی

تُو اگر میرا نہیں بنتا نا بَن اپنا تو بَن